Khalil ur Rehman Qamar Poetry, Khalil ur Rehman Qamar Poetry in urdu ||| Khalil ur Rehman

Khail ur Rehman is a famous Pakistani Writer, Drama Writer, Actor. He was born in Pakistan. He wrote so many Dramas such as Mere Pass Tum Ho, Pyare Afzal, Laal Ishq

For More Visit 

Poetry Sector

Khalil ur Rehman Qamar Poetry
Khalil ur Rehman Qamar Poetry

اپنی آنکھوں میں قمر جھانک کر دیکھوں کیسے 
مجھ سے دیکھے ہوئے منظر نہیں دیکھے جاتے 

Apni Ankhoon Ma Jhaank Kar Dekho Kase 
Mugh Se Dekhe Howe Manzar Nahi Dekhe Jate 

Khalil ur Rehman Qamar Poetry
Khalil ur Rehman Qamar Poetry

تم بھی ویسے تھے مگر تم کو خدا رہنے دیا 
اس طرح تم کو زمانے سے جدا رہنے دیا 

Tum Bhe Wase The Magar Tum Ko Khuda Rehne Diya
Iss Tarah Tum Ko Zamane Se Juda Rehne Diya 

Khalil ur Rehman Qamar Poetry
Khalil ur Rehman Qamar Poetry

میری برسوں کی اداسی کو کچھ تو صلہ ملے 
اس سے کہہ دو وہ میرا قرض چکانے آئے 

Meri Barson Ki Udasi Ko Kuch Tu Sila Mile
Usse Se Keh Do Woh Mera Karz Chukane Aye

Khalil ur Rehman Qamar Poetry
Khalil ur Rehman Qamar Poetry

یہ لوحِ عشق پر لکھا ہے تیرے شہر کے لوگ
وفا سے جیت بھی جائیں تو ہار جائیں گے 

وہ جن کے ہاتھ میں کاغذ کی کشتیاں ہوں گی 
سنا ہے چند وہی لوگ پار جائیں گے 

کتابِ ظرف، محبت پے ہاتھ رکھ کر کہو 
سوال جان کا آیا تو وار جائیں گے 

Yeah Loho e Ishq Par Likha Hai Tere Seher Ke Log 
Wafa Se Jeet Bhe Jayain Tu Haar Jayain Ge 

Woh jin Ke Hath Ma Kagaz Ki Kistiyan Ho Gi 
Suna Hai Chand Wohi Log Haar jaye Ge 

kitaab e Zarf e Muahabbat Pe Hath Rekh Kar Kaho 
Sawal Jaan Ka Aya Tu War Jaye Ge

Khalil ur Rehman Qamar Poetry
Khalil ur Rehman Qamar Poetry

پھر وہ خدا کی خدائی میں کھو گیا ہوگا 
تیرے گھر کی دہلیز پر بھوکا سو گیا ہو گا 

Phir Woh Khuda Ki Khudai Ma Kho Gaya Ho Ga 
Tere Ghar Ki Dehleez Par Bhooka Soo Gya Ho Ga 

Khalil ur Rehman Qamar Poetry
Khalil ur Rehman Qamar Poetry

میری آنا نے ہی گوارا نہیں کیا ورنہ 
میری چند بددعاوں کی مار تھا وہ شخص 

Meri Ana Na Hi Nahi Gawara Nahi Kiya Warna 
Meri Chand Bad Duaoon Ki Mar Tha Woh Shaks 

Khalil ur Rehman Qamar Poetry
Khalil ur Rehman Qamar Poetry

میں چاہتا ہوں کہ اس سے ملوں تو مر جاوں 
وہ میری آخری خواہش کا معجزہ دیکھے 

Main Chahata Hun Keh Us Se Milo Tu Mar Jaon 
WohMeri Akhari Khaish Ka Mujzah Dekhe 

Khalil ur Rehman Qamar Poetry
Khalil ur Rehman Qamar Poetry

تم سےلےجائیں گے چھین کر ہم وعدے اپنے
اب تو قسمت کی صداقت سے بھی ڈرجا ئیں گے

Tum Se Le Jaye Ge Chehn Kar Hu Wade Apne 
Ab Tu Kismat Ki Sadrat Se Bhe Dar Jaye Ge 

Hope You Guys Like it